سی پیک کو متبادل روٹ فراہم کرنے والی دو رابطہ سڑکوں کی تعمیر کی منظوری

سی پیک کو متبادل روٹ فراہم کرنے والی دو رابطہ سڑکوں کی تعمیر کی منظوری

ایکنک کا اجلاس وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین کی زیرصدارت منعقد ہوا جس میں وزیر توانائی حماد اظہر، مشیر تجارت عبدالرزاق داﺅد، مشیر ادارہ جاتی اصلاحات ڈاکٹر عشرت حسین اور دیگر اعلیٰ افسران نے شرکت کی۔

اسلام آباد: قومی اقتصادی کونسل کی انتظامی کمیٹی (ایکنک) نے خضدار کچلاک ہائی وے، شندور گلگت روڈ سمیت شاہراہوں اور آبی ذخائر کے مختلف منصوبوں کی منظوری دیدی۔

اجلاس میں سی پیک کو متبادل روٹ فراہم کرنے کیلئے دو بین الصوبائی رابطہ سڑکوں (گلگت شندور روڈ اور استور شندور) کی تعمیر کی منظوری دی گئی جن کی مجموعی لاگت 70 ارب روپے سے زائد ہے اور جو گلگت بلتستان کو آزاد کشمیر اور خیبر پختونخوا کے ساتھ ملائیں گی۔

ایکنک اجلاس میں بین الصوبائی رابطہ کاری، اقتصادی راہداری (گلگت بلتستان اور آزاد جموں و کشمیر، استور ویلی روڈ کی توسیع) اور مجموعی طور پر 121 کلو میٹر طویل سڑکوں کی تعمیر کی منظوری دی گئی جس پر 19.195 ارب روپے لاگت آئے گی، یہ منصوبہ وزارت امور کشمیر و گلگت بلتستان کی جانب سے سپانسر کیا جائے گا جو تین سال کے عرصہ میں مکمل ہو گا۔

Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: