عمر اکمل نے کرپٹ عناصر کی رسائی کی اطلاع نہ دینے پر معافی مانگ لی

عمر اکمل نے کرپٹ عناصر کی رسائی کی اطلاع نہ دینے پر معافی مانگ لی

پابندی کا شکار پاکستانی مڈل آرڈر بیٹسمین عمر اکمل نے کرپٹ عناصر کی جانب سے رسائی کی اطلاع نہ دینے پر عوام سے مانگ لی ہے۔

بدھ کے روز پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی جانب سے جاری کردہ ایک ویڈیو پیغام میں 31 سالہ عمر اکمل نے کہا کہ میں نے گزشتہ سال ایک غلطی کی ہے جس سے کیریئر اور کرکٹ دونوں کو نقصان پہنچا ہے-

انہوں نے کہا کہ کچھ لوگوں نے مجھ سے رابطہ کیا لیکن میں پی سی بی کے اینٹی کرپشن یونٹ کو اس کی اطلاع دینے سے قاصر رہا جس کی وجہ سے مجھے 12 ماہ کی پابندی کا سامنا کرنا پڑا اور یہ میرے لیے بہت مشکل وقت رہا۔

عمر اکمل نے مزید کہا کہ میں نے اس دوران بہت کچھ سیکھا اور آج میں آپ سب کے سامنے اعتراف کرتا ہوں کہ اس غلطی سے پاکستان کرکٹ کی بدنامی ہوئی۔

پاکستان سپر لیگ کے پانچویں ایڈیشن کے آغاز سے چند گھنٹوں قبل ہی فروری 2020 میں عمر اکمل کو معطل کردیا گیا تھا جہاں ان پر الزام تھا کہ وہ کرپت عناصر کی جانب سے ان تک کی گئی رسائی کے بارے میں بتانے میں ناکام رہے۔

انہوں نے اس غلطی پر اپنے اہلخانہ، پی سی بی اور کرکٹ شائقین سے معافی مانگی۔‎

Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: